دہشت گردی کا اسلام اور انسانیت سے کوئی واسطہ نہیں

ایسی سفاک کارروائی کرنے والے انسان کہلانے کے بھی مستحق نہیں

پختہ ارادے کے ساتھ یہ لعنت تین ماہ میں ختم ہو سکتی ہے: ڈاکٹر محمد طاہر القادری

پاکستان عوامی تحریک کے چئیرمین ڈاکٹر محمد طاہر القادری نے کراچی میں شیعہ رہنما علامہ حسن ترابی اور ان کے بھانجے کی بم دھماکے میں ہلاکت کی شدید مذمت کرتے ہوئے اسے بزدلانہ کارروائی قرار دیا ہے۔ انہوں نے لندن سے پارٹی ترجمان جی ایم ملک سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ دہشت گردی کا اسلام اور انسانیت سے کوئی واسطہ نہیں، ایسی سفاک کارروائی کرنے والے انسان کہلانے کے بھی مستحق نہیں ہیں۔ اس بہیمانہ کارروائی میں ملوث عناصر سے آہنی ہاتھوں سے نپٹنا ہوگا۔ انہوں نے کہا ایسی کارروائیوں کا تسلسل قانون نافذ کرنے والے اداروں کی ناکامی ہے۔ ڈاکٹر محمد طاہر القادری نے کہا کہ انتہا پسندی اور دہشت گردی کا وجود ملکی امن اور ترقی کی راہ میں سب سے بڑی رکاوٹ ہے۔ انتہا پسندانہ رویوں کے خاتمے کیلئے مذہبی و سیاسی جماعتوں اور حکومت کو مل کر کردار ادا کرنا چاہیے تا کہ اس ناسور کا خاتمہ ہو سکے۔ انہوں نے کہا کہ سندھ حکومت امن و امان کے نفاذ میں بری طرح ناکام دکھائی دیتی ہے۔ دہشت گردانہ کاروائیوں میں ملوث عناصر کو اگر قانونی تقاضوں کے مطابق کڑی سزائیں دے کر عبرت کا نشان بنایا ہوتا تو آج ایسے واقعات نہ ہوتے۔ انہوں نے کہا کہ اگر حکومت دہشت گردی کے خاتمے میں مخلصانہ کردار ادا کرے تو یہ تین ماہ کے اندر جڑ سے ختم کی جا سکتی ہے مگر شرط یہ ہے کہ اس لعنت کے خاتمے کا پختہ ارادہ کر لیا جائے۔

تبصرہ

تلاش

ویڈیو

Minhaj TV
Quran Reading Pen
AL-HIDAYAH, Quran Festival, Quran Art Work, al-Hidayah Research Institute, al-Hidayah eLearning Institute
Dr Tahir-ul-Qadri's books App Islamic Library by MQI
Presentation MQI websites
Advertise Here
Top