نظام المدارس پاکستان کا ڈاکٹر حسن محی الدین قادری کی سربراہی میں اجلاس

مدارس دینییہ کا علمی، تربیتی تشخص بحال کریں گے: سرپرست اعلیٰ نظام المدارس پاکستان
اجلاس میں خرم نواز گنڈاپور، مفتی امداد اللہ قادری، مفتی میر آصف اکبر، ڈاکٹر ممتاز الحسن باروی نے شرکت کی

لاہور (11 فروری 2021ء) نظام المدارس پاکستان کو بورڈ کا درجہ ملنے کے بعد اس کا پہلا اجلاس سرپرست اعلیٰ ڈاکٹر حسن محی الدین قادری کی سربراہی میں منعقد ہوا۔ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے ڈاکٹر حسن محی الدین قادری نے کہا کہ نظام المدارس پاکستان کے تحت رجسٹرڈ مدارس میں زیرتعلیم طلبہ کو دینی علوم کے ساتھ ساتھ عصری علوم بھی پڑھائیں گے۔ اس حوالے سے ماہرین تعلیم سے مل کر ایک جامع نصاب مرتب کر لیا گیا ہے، ان شاء اللہ نظام المدارس سے فارغ التحصیل طلبہ کو ملنے والی ڈگری نہ صرف پاکستان بلکہ پاکستان کے باہر بھی قابل قبول ہو گی۔ ہم مدارس دینییہ کا علمی، تحقیقی، تربیتی تشخص اور وقار بحال کریں گے۔

اجلاس میں ناظم اعلیٰ منہاج القرآن انٹرنیشل خرم نواز گنڈاپور، نظام المدارس پاکستان کے صدر علامہ مفتی امداد اللہ قادری، ناظم اعلیٰ مفتی میر آصف اکبر اور ڈاکٹر ممتاز الحسن باروی نے شرکت کی۔

ڈاکٹر حسن محی الدین قادری نے کہا کہ منہاج القرآن نے اپنے 40 سالہ تعلیم و تربیت کے سفر میں فرد کی کردار سازی پر توجہ دی، منہاج القرآن کے تعلیمی اداروں سے فارغ التحصیل طلبہ پاکستان اور پاکستان سے باہر ایک کامیاب پروفیشنل کے طور پر خدمات انجام دے رہے ہیں۔ منہاج القرآن کے قائم کردہ تعلیمی اداروں کا معیار اب نظام المدارس پاکستان میں بھی نظر آئے گا۔ انہوں نے کہا کہ مدارس دینییہ میں زیرتعلیم طلبہ کا یہ حق ہے کہ وہ تعلیم مکمل کرنے کے بعد زندگی کے ہر شعبہ میں باعزت روزگار کمانے کے ساتھ ساتھ بطور پروفیشنل ملک و ملت کی خدمت کا فریضہ احسن انداز میں انجام دے سکیں۔

تبصرہ

تلاش

ویڈیو

We Want to CHANGE the Worst System of Pakistan
Presentation MQI websites
Advertise Here
Top