قوموں کی تعمیر اور معاشروں کی تشکیل میں عورت کا نمایاں کردار رہا ہے : منہاج القرآن ویمن لیگ

معاشرے کو تباہی اور بربادی سے بچانے کے لیے اغیار کی ثقافت سے اپنے دامن کو بچانا ہو گا
اسلام کو مضبوطی سے تھامنے میں ہی عورت کی بقاء ہے
منہاج القرآن ویمن لیگ کی تربیتی ورکشاپ سے مقررین کا خطاب

منہاج القرآن ویمن لیگ کی مرکزی صدر فاطمہ مشہدی نے ویمن لیگ کے زیراہتمام لاہور میں خواتین کی تربیتی ورکشاپ سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ قوموں کی تعمیر اور معاشروں کی تشکیل میں عورت کا نمایاں کردار رہا ہے۔ اسی طرح معاشرے کے استحکام میں عورت کے کردار سے کوئی ذی شعور انکار نہیں کر سکتا۔ انہوں نے کہا کہ عورت ماں، بہن، اور بیوی کے روپ میں ایک گراں قدر نعمت خداوندی ہے۔ اور وہ معاشرے جواس نعمت کی قدر نہیں کرتے اور اسے اس کا صحیح مقام دینے سے قاصر رہتے ہیں وہ معاشرے بے حیائی، فحاشی، بے راہروی اور نفسا نفسی کا شکا ر ہو جاتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ عورت کو بھی معاشروں میں اپنا مقام بنانے کے لیے اپنے کردار کو مضبوط اور مستحکم کرنا ہوتا ہے۔ اسلام عورت کی بہترین پناہ گاہ ہے اور اس پناہ گاہ سے نکلنے کے بعد عورت اپنی عزت اور عصمت سے ہاتھ دھو بیٹھتی ہیں۔ مرکزی ناظمہ ویمن لیگ فاطمہ مشہدی نے کہا کہ عورت کو پاؤں کی جوتی اور اشتہار اور چوباروں کی زینت بنانے والی قومیں ہمیشہ زوال کا شکار ہوئیں۔ پاکستانی معاشرے کو تباہی اور بربادی سے بچانے کے لیے اغیار کی ثقافت سے اپنے دامن کو بچانا ہو گا اور یہ پاکستانی مرد و خواتین کی اجتماعی ذمہ داری ہے۔ کونسل سے خطاب کرتے ہوئے منہاج القرآن کی دیگر مرکزی قائدین سمیرا رفاقت اور مریم حفیظ نے کہا کہ اسلام کو مضبوطی سے تھامنے میں ہی عورت کی بقاء ہے۔ کردار کی مضبوطی اور دینی قدروں کی پاسداری عورت کو معاشرے میں قابل عزت مقام عطا کرتی ہے جبکہ اغیار کے نقش قدم پر چلنے سے عورت اپنا تقدس کھو دیتی ہے۔ ضرورت اس امر کی ہے کہ آج کی عورت مغربی اور لادین طبقات کی نقالی سے گریز کرے، دینی اقدار پر کار بند رہے اور معاشرے کی تشکیل اور اس کے استحکام کے لیے مؤثر کردار ادا کرے۔ اس موقع پر محترمہ فریحہ خان، محترمہ عفت وحید اور محترمہ ساجدہ صادق نے بھی خطاب کیا۔ تربیتی ورکشاپ میں ملک بھر سے تحصیلی تنظیمات کی عہدیدران کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔

تبصرہ

تلاش

ویڈیو

Ijazat Chains of Authority
We Want to CHANGE the Worst System of Pakistan
Top