شیخ الاسلام ڈاکٹر محمد طاہرالقادری اور تحریک منہاج القرآن کی پیر نصیر الدین شاہ نصیر کی رحلت پر تعزیت

ملک کی معروف علمی و روحانی اور ادبی شخصیت حضرت صاحبزادہ پیر سید نصیر الدین نصیر شاہ گولڑوی 13 فروری 2009ء بروز جمعۃ المبارک کو دوپہر دو بجے اسلام آباد گولڑہ شریف میں قضائے الٰہی سے وفات پا گئے۔ إِنَّا لِلّهِ وَإِنَّـا إِلَيْهِ رَاجِعُونَO

ان کی ناگہانی وفات پر تحریک منہاج القرآن کے بانی و سرپرست اعلیٰ شیخ الاسلام ڈاکٹر محمد طاہرالقادری نے گہر ے رنج و الم کا اظہار کیا ہے۔ شیخ الاسلام ڈاکٹر محمد طاہرالقادری نے پیر صاحب کے وصال پر اظہار افسوس کرتے ہوئے اسے عالم اسلام کے لیے ناقابل تلافی نقصان قرار دیا۔ دریں اثناء منہاج القرآن انٹرنیشنل کی سپریم کونسل کے صدر صاحبزادہ حسن محی الدین قادری، ممبر صاحبزادہ حسین محی الدین قادری، امیر تحریک صاحبزادہ فیض الرحمٰن درانی، ناظم اعلیٰ ڈاکٹر رحیق احمد عباسی، نائب ناظم اعلیٰ شیخ زاہد فیاض، ناظم امورخارجہ جی ایم ملک اور تحریک منہاج القرآن و پاکستان عوامی تحریک کے تمام فورمز نے بھی پیر صاحب کی وفات پر گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کیا ہے۔

پیر صاحب وطن عزیز کے معروف روحانی خانوادہ گولڑہ شریف کے سجادہ نشین تھے اور ان کا شمار ملک کے چوٹی کے شعراء میں ہوتا تھا۔ وہ ایک صاحب علم اور محقق تھے۔ انہوں نے بہت سے موضوعات پر قلم اٹھایا اور شاندار علمی ورثہ مرتب کیا۔ ان کی 40 سے زائد کتب شائع ہو چکی ہیں۔ وہ بیک وقت فارسی، اردو، عربی اور پنجابی میں شعر کہتے تھے۔ ان کے متعدد شعری مجموعے اہل ذوق سے تحسین حاصل کر چکے ہیں۔ وہ خانقاہی نظام کو روائتی تصوف کی بجائے ایک فعال علمی اور تربیتی کردار کا حامل دیکھنے کے متمنی تھے۔ وہ امریکہ، یورپ اور مشرق وسطیٰ کے دعوتی اور تبلیغی دورے بھی کرتے تھے اور ملک و بیرون ملک ایک وسیع حلقہ ارادت رکھتے تھے۔

پیر صاحب تحریک کے زیراہتمام ہونے والی سرگرمیوں میں باقاعدگی سے شرکت کرتے اور تحریکی سرگرمیوں سے باخبر بھی رہتے تھے۔ 28 جون 2008ء کو جب پیر صاحب نے صاحبزادہ حسین محی الدین قادری کی دعوت ولیمہ میں شرکت کی اور دولہے کے لیے خود اپنا لکھا سہرا بھی پیش کیا تو یہ تحریک منہاج القرآن کے کسی بھی پروگرام میں ان کی آخری شرکت تھی۔ علاوہ ازیں تحریک منہاج القرآن کے زیراہتمام 3 مارچ کو ہونے والی آل پاکستان علماء و مشائخ کانفرنس میں بھی پیر صاحب نے خصوصی شرکت کرنا تھی، اور اس سلسلہ میں ناظم اعلیٰ ڈاکٹر رحیق احمد عباسی سے ایک روز قبل ان کا ٹیلی فونک رابطہ بھی ہوا تھا۔ جس میں پیر صاحب نے آل پاکستان علماء و مشائخ کانفرنس میں شرکت کی یقین دہانی کرائی تھی۔ وہ اپنی علمی و تحقیقی کاوشوں سے شیخ الاسلام ڈاکٹر محمد طاہرالقادری سے بھی رابطے میں رہتے تھے۔ پیر صاحب کی اچانک اور قابل افسوس وفات امت مسلمہ کے لیے بھی سانحہ ارتحال ہے جس کو تحریک منہاج القرآن کے قائدین و کارکنان ایک بڑا نقصان سمجھ کر پیر صاحب کے اہلخانہ و مریدین کے غم میں شریک ہیں۔

تبصرہ

تلاش

ویڈیو

Ijazat Chains of Authority
We Want to CHANGE the Worst System of Pakistan
Top