امت مسلمہ نے اپنے اسلاف کے راستے کو ترک کر کے ذلت و رسوائی کو اپنا مقدر بنا لیا ہے : ڈاکٹر محمد طاہر القادری

شیخ الاسلام ڈاکٹر محمد طاہر القادری کی مجلس عاملہ کے اجلاس میں گفتگو

شیخ الاسلام ڈاکٹر محمد طاہر القاد ری نے کہا ہے کہ امت مسلمہ اتحاد او ر یکجہتی کا دامن تھام کر علم کے فروغ کو اپنی پہلی ترجیح بنا لے تو کوئی وجہ نہیں کہ اس کا زوال عروج میں نہ بدل سکے۔ انہوں نے کہا کہ اغیا ر نے اسلام کے سنہرے اصولوں پر عمل کر کے معاشی، سائنسی ترقی اور سیاسی استحکام حاصل کر لیا مگر امت مسلمہ نے اپنے اسلاف کے راستے کو ترک کر کے ذلت و رسوائی کو اپنا مقدر بنا لیا ہے۔ وہ کینڈا سے تحریک منہاج القرآن کی مجلس عاملہ کے اجلاس سے ٹیلی فونک خطاب کر رہے تھے۔ انھوں نے کہا کہ امت وسائل کی فروانی اور بہترین ذہنیت کی حامل ہنر مند افرادی قوت کے باوجود سیاسی اور معاشی قوت صرف اس لیے نہیں بن سکی کہ اسلامی ممالک کے حکمران ذاتی مفادات کے خول میں بند ہیں۔ شیخ الاسلام نے کہا کہ اس وقت اسلام کی سیاسی قوت کمزور اور منتشر ہے اس لیے پوری دنیا میں مسلمان عدم تحفظ کے شدید احساس کے ساتھ رہنے پر مجبور بنا دیئے گئے ہیں۔ او آئی سی کا کردار غلامانہ ہے اور کشمیر، فلسطین، افغانستان اور عراق مسلمانوں کی بے بسی کی تصویر بنے ہوئے ہیں۔ ان حالات میں موثر اسلامی ممالک کے سربراہان امت کے اجتماعی مسائل کے حل کیلئے بیٹھیں اور حکمت کے ساتھ ایسی پالیسیاں تشکیل دیں جن کے باعث آنے والی مسلمان نسلوں کا مستقبل باوقار بنایا جا سکے۔ انہوں نے کہا کہ اگر مسلم حکمران موجودہ روش سے تائب نہ ہوئے تواسلام کے معاشی اور سیاسی عروج کا خواب شرمندہ تعبیر نہ ہو سکے گا۔

تبصرہ

تلاش

ویڈیو

We Want to CHANGE the Worst System of Pakistan
Presentation MQI websites
Advertise Here
Top